Back

انرجی ڈرنکس کے نقصانات

خود کو چاق و چوبند رکھنے کے لئے انرجی ڈرنکس کا بکثرت استعمال کرنے والے ہوشیار ہو جائیں کیونکہ اس سے ان کا جگر بھی شدید طور پر متاثر ہو سکتا ہے اور وہ ہیپاٹائٹس جیسی خطرناک بیماری میں بھی مبتلا ہو سکتے ہیں

تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ انرجی ڈرنکس کے مسلسل یا زیادہ استعمال سے پسلیوں میں درد، بھوک میں کمی اور نظام انہضام کے بگاڑ جیسی کئی بیماریاں جنم لیتی ہیں جو کہ بڑھ کر جگر کی بیماری ہیپاٹائٹس کی وجہ بنتی ہیں

انرجی ڈرنکس کی ٢٤٠ ملی لیٹر بوتل میں وٹامن بی تھری کی جسے نیاسین بھی کہا جاتا ہے ٢٠ ملی گرام مقدار موجود ہوتی ہے، جبکہ ایک بالغ فرد کو پورے دن میں وٹامن بی تھری کی ٣٠ سے ٣٥ ملی گرام مقدار کی ضرورت ہوتی ہے، یہی زیادہ مقدار جگر پر بدترین اثرات مرتب کرتے ہوئے ہیپاٹائٹس کی وجہ بنتی ہے

انرجی ڈرنکس صرف وقتی فائدہ پہنچاتے ہیں لیکن اگر ان کا استعمال جاری رکھا جائے تو جگر کو ناقابل تلافی نقصان پہنچ سکتا ہے، اس لئے انرجی ڈرنکس کی بجائے پھلوں کے تازہ جوس اور دودھ وغیرہ پینے کی عادت اختیار کریں

Advertisements